علامتی تصویر
علامتی تصویر
علامتی تصویر

شوپیا ن میں دو جنگجو اور ایک فوجی اہلکار ہلاک 2 اہلکار زخمی

شوپیان میں جنگجوؤں اور فورسز کے درمیان جھڑپ میں دو جنگجو اور ایک فوجی اہلکار ہلاک جبکہ دو اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔پولیس کے انسپکٹر جنرل وجے کمار نے کہا کہ مہلوک جنگجوؤں میں سے ایک کی شناخت عادل احمد وانی کے بطور کی گئی ہے جو پلوامہ کے لتر علاقے میں ایک غریب مزدور کی ہلاکت میں ملوث تھا۔

سی این ایس کے مطابق فورسز نے درگڈ گاؤں کو محاصرے میں لیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ فورسز کو علاقہ میں دو جنگجو ؤں کے چھپے ہونے کی مخفی اطلاعات ملی تھی جس کے بعد انہوں نے تلاشی کارروائی شروع کردی۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ علاقے میں اْس گولیوں کی گن گرج سنائی دی جب بستی میں موجود جنگجوؤں اور فورسز کے درمیان جھڑپ شروع ہوئی۔ذرائع کے مطابق اس سے قبل فورسز افسران نے وہاں موجودجنگجو کوخودسپردگی یاسرنڈرکیلئے آمادہ کرنے کی کوشش کی۔پولیس ودفاعی ذرائع نے بتایاکہ سرنڈرپیشکش ٹھکرانے کے بعد محصورجنگجوکی اندھادھندفائرنگ کے جواب میں فورسز اہلکاروں نے بھی اپنی بندوقوں کے دہانے کھول دئیے جسکے نتیجے میں طرفین کے درمیان شدیدنوعیت کی گولی باری شروع ہوئی جبکہ اس دوران سماعت شکن دھماکوں سے پوراعلاقہ لرزاٹھا۔طرفین نے خود کار ہتھیاروں سے ایک دوسرے کو نشانہ بنایا اور بندوقوں کے دہانے ایک دوسرے پر کھول دئے۔

گولیوں کی گن گرج سے پورا علاقہ گونج اٹھا اور ہر سو خوف و ہراس کی لہر بھی پھیل گئی۔ پولیس کے مطابق محا صر میں پھنسے جنگجو نے گولیاں چلاتے ہوئے فرار ہونے کی کوشش کی ذرائع کے مطابق علاقے میں گولیاں کا تبادلہ دوپہر تک جاری رہا اور فائرنگ کا تبادلہ تھم جانے کے ساتھ ہی جھڑپ کے مقام سے تلاشی کے دوران دو جنگجو ؤں کی لاشیں بر آمد کر لی گئی ہیں اور ان کے قبضے سے ہتھیار بھی بر آمد کر لیا گیا جبکہ جھڑ پ کے دوران ایک فوجی اہلکار ہلاک جبکہ دو دیگر زخمی ہوئے ہیں۔جھڑ پ میں دو مقامی عسکریت پسند مارے گئے جن میں سے ایک کی شناخت ہف شرمال کے رہنے والے عادل احمد وانی کے طور ہوئی ہے۔

انسپکٹر جنرل آف پولیس کے مطابق وانی لشکر طیبہ (دی ریزسٹنس فرنٹ یا ٹی آر ایف) کا ضلع کمانڈر تھا۔ دوسرے کی شناخت عرفات احمد شیخ ولد محمد مقبول ساکن نیلورہ، پلوامہ کے طور ہوئی ہے کشمیر زون پولیس کے انسپکٹر جنرل وجے کمار نے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا کہ شوپیاں تصادم میں ہلاک ہونے والے دو جنگجوؤں میں سے ایک کی شناخت عادل احمد وانی کے بطور ہوئی ہے جو جولائی2020 سے سرگرم تھا۔انہوں نے بتایا کہ مہلوک جنگجو پلوامہ کے لتر علاقے میں ایک غریب مزدور کی ہلاکت میں ملوث تھا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ گذشتہ دو ہفتوں کے دوران اب تک15 جنگجوؤں کو ہلاک کر دیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں