ممبئی حملوں کے 13سال ہونے کے باوجود بھی زخم آج بھی تازہ، کسی کی قربانی کو ہم نہیں بھولیں ہے : وزیراعظم

سرینگر:سال 2008 میں ممبئی حملہ کو بھارت پر سب سے بڑا قرار دیتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم ہند نریندر مودی نے کہا کہ ”ہم پاکستان کے عسکریت پسندوں کی جانب سے دئے گئے زخموں کو کبھی نہیں بھول سکتے ہیں“۔انہوں نے کہا کہ ملک نئی پالیسیوں سے شدت پسندی کا مقابلہ کر رہا ہے۔سی این آئی مانیٹرنگ کے مطابق 26/11حملوں کی 13برسی کے موقعہ پرمرکزی وزرات خارجہ کی جانب سے ایک چھوٹا ویڈیو جاری کیا گیا جس میں وزیر اعظم نریندر مودی نے ممبئی حملوں میں ہلا ک ہونے والوں کو خراج عقیدت پیش کرتا ہے۔

اس دوران ویڈ یو میں خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ سال 2008 میں 26نومبر کو پاکستان سے آئے عسکریت پسندوں نے ممبئی پر حملہ کیا۔ غیر ملکی شہریوں اور پولیس اہلکاروں سمیت متعدد ہلاک ہوگئے۔ انہوں نے کہا کہ میں انہیں خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔وزیر اعظم مودی نے کہا کہ بھارت ان زخموں کو فراموش نہیں کرسکتا۔

آج بھارت نئی پالیسیوں سے شدت پسندی کا مقابلہ کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں شدت پسندی سے لڑنے والے اپنے سیکورٹی اہلکاروں کے سامنے بھی سر جھکتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے آئین کے تینوں شعبے کے کردار سے لے کر اس کی روح تک ہر چیز آئین میں شامل ہے۔ اگرچہ ہم نے گواہی دی کہ 1970 کے دہائی میں اقتدار کی علیحدگی کے وقار کے خلاف کس طرح کوششیں کی گئیں لیکن اس کا جواب آئین سے ہی سجاوٹ اور اختیار کی علیحدگی کے طور پر سامنے آیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہماری سکیورٹی فورسز کی ہمت کی ؎تعریف کرتے ہیں، جو پوری قوم کے دفاع کے لئے اس کا عزم کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حملوں کے بعد بھارت سرحد پار سے ہونے والی شدت پسندی کے خطرے کو مستقل طور پر اجاگر کرتا رہا ہے اور کہ پاکستان مختلف عسکریت پسندوں کس طرح پناہ دے رہا ہے اور مدد فراہم کرتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں