”پولیوشن کنٹرول بورڈ ”کی کارکردگی پر سوالیہ نشان؟

نوگام میں ’کار واشنگ سنیٹر‘ کو بند کرنے کے احکامات 7ماہ سے التواء میں
خبراردو:-

سرینگر:سرینگر کے ریلوئے کالونی نوگام مین ضلع ترقیاتی کمشنر سرینگر اور پولیوشن کنٹرول بورڑ کی جانب سے ایک کار واشنگ سینٹر کو بند کرنے کی سفارشات کو سرد خانے میں ڈال دیا گیا ہے،تاہم شکایت کندہ نے لیفٹنٹ گورنر کے نام مکتوب روانہ کرتے ہوئے الزام عائد کیا ہے کہ اثر رسوخ کی بنیاد پر اس معاملے کو گزشتہ 7ماہ سے التواء میں ڈال دیا گیا ہے ۔

کشمیر نیوز سروس ( کے این ایس ) کے مطابق سرینگر کی نوگام ریلوئے کالونی کی بستی کے بیچوں بیچ کار دھونے کا مرکز قائم کیا گیا،جس کے بعد اس کی شکایت ضلع ترقیاتی کمشنر سرینگر،اور پولیوشن کنٹرول بورڈ میں کی گئی ۔

بورڈ کے دیجنل ڈائریکٹر نے اس معاملے میں ممبر سیکریٹری پولیوشن کنٹرول بورڈ کو19دسمبر2020ایک مکتوب زیر نمبرSPCB/ROK/2019/301 روانہ کیا،جس میں ریلوئے کالونی نوگام میں کار واشنگ سینٹر کے اجازت نامہ کو واپس لینے اور اس اس یونٹ کو بند کرنے کی سفارش کی گئی ۔

مکتوب میں ضلع مجسٹریٹ سرینگر کی جانب سے اس معاملے میں ایک مکتوب زیرنمبر ŸŽDCS/PS/MS/19/1818 بہ تاریخ16ستمبر2019کا حوالہ دیتے ہوئے مذکورہ کار واشنگ سینٹر کو بند کرنے کی سفارش کا بھی حوالہ دیا گیا ۔

کیونکہ اس یونٹ کو رہائشی علاقے میں سرینگر مونسپل کارپوریشن کی جانب سے اجازت نامہ کے بغیر تجارتی مرکز کے طور پر استعمال کرنے قائم کیا گیا جو کہ محکمہ تعمیرات عامہ اور جموں کشمیر شہری ترقی قانون کی خلاف ورزی ہے ۔ مکتوب میں مزید کہا ہے کہ نیز اس جگہ کا معائنہ ’’ ڈی اءو‘‘ نے بھی کیا تھا،جنہوں نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ متواتر شکایات موصول ہونے کے بعد اس یونٹ کو اپنی پولیوشن کنٹرول ساز و سامان اور آلات میں بہتری لانے کی ہدایت دی گئی تھی،تاہم انہوں نے بورڈ کی ہدایات کو نظر انداز کیا ۔

ریجنل ڈائریکٹر کے مکتوب میں مزید کہا گیا ہے کہ ’’ڈی اؤ‘‘ نے بھی اپنی رپورٹ میں اس یونٹ کو دئیے گئے اجازت نامہ کو واپس لینے کی سفارش کی ہے ریجنل ڈائریکٹر نے کا کہنا تھا کہ ان حقائق کی بنیاد پر اس یونٹ کو نارنگی زمرے میں جو اجازت دی گئی تھی ،واپس لی جاتی ہے،اور ضلع مجسٹریٹ سرینگر کی سفارش پر اس یونٹ کو فوری طور پر بند کرنے کے احکامات صادر کئے جاتے ہیں ۔ ادھر شکایت کندہ کا کہنا ہے کہ7ماہ گزر جانے کے بعد بھی اس حکم نامہ کو عملی جامہ نہیں پہنایا گیا ۔

شکایت گزار نے لیفٹنٹ گورنر کو ایک عرضی پیش کی ہے،جس میں کہا گیا ہے کہ با اختیار حکام نے23اکتوبر کو کو15روز کے اندر اس یونٹ کو بند کرنے کی نوٹس جاری کی تھی،تاہم ابھی تک زمینی سطح پر ان احکامات کو عملایا نہیں گیا ۔

شکایات گزار نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پولیشن کنٹرول بورڈ میں نئے افسران کی تعیناتی کے بعد معاملے کو ٹھنڈے بستے کی نذر کردیا گیا،اور وہ نئے افسران غیر ضروری طور پر کار واشنگ یونٹ کے مالک کی حماءت کرتے ہیں ۔ انہوں نے گورنر سے اپیل کی ہے کہ موجودہ انتظامیہ پر کسی بھی طرح کا سیاسی دباءو نہیں ہے،اور انہیں اس تناظر میں امید ہے کہ انہیں انصاف فراہم کیا جائے گا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں