دیویندر سنگھ رانا اور سرجیت سنگھ سلاتھیہ کی بی جے پی میں شمولیت

دہلی میں مرکزی وزراء ہردیپ سنگھ پوری، دھرمیندر پردھان اور جیتیندر سنگھ کی موجودگی میں رکنیت حاصل
سرینگر: نیشنل کانفرنس کے سابق رہنما دیویندر سنگھ رانا اور سرجیت سنگھ سلاتھیہ نے باضابطہ طور پر بھارتیہ جنتا پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی ہے۔گزشتہ روز نیشنل کانفرنس سے استعفیٰ دینے والے جموں و کشمیر کے سابق ایم ایل اے دیویندر سنگھ رانا نے دہلی میں مرکزی وزراء ہردیپ سنگھ پوری، دھرمیندر پردھان اور جیتیندر سنگھ کی موجودگی میں بی جے پی کی رکنیت حاصل کی۔

دیوندر سنگھ رانا سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ کے دور اقتدار میں انکے سیاسی صلاح کار تھے اور انہیں 2011میں نیشنل کانفرنسصوبائی صدر جموں بنایا گیا۔رانا نے جموں صوبے میں نیشنل کانفرنس کی بنیادوں کو مضبوط کردیا اور وہ سب سے طاقتور سیاسی لیڈر مانے جاتے ہیں۔

وہ2014میں نیشنل کانفرنس کی ٹکٹ پر نگروٹہ اسمبلی حلقہ انتخاب سے منتخب ہوئے۔اس سے قبل وہ قانون ساز کونسل میں نیشنل کانفرنس رکن اور اپوزیشن لیڈر بھی تھے۔چند روز قبل دیور رانا نے ڈاکٹر فاروق عبداللہ کیساتھ انکی رہائش گاہ گپکار میں بھی ملاقات کی تھی اور باہر آکر میڈیا سے کہا تھا کہ وہ ’ابھی تک‘ نیشنل کانفر نس کیساتھ ہی ہیں۔سرجیت سنگھ سلاتھیہ ممبر اسمبلی رہے ہیں اور عمر عبداللہ حکومت میں وہ کابینہ وزیر بھی تھے۔

دونوں لیڈر این سی کے جموں میں سب سے سینئر اور قد آور لیڈر تھے۔ اتوار کو دیوندر رانا اور سلاتھیہ کااستعفیٰ پارٹی صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے منظور کر لیا تھا جس کے بعد نیشنل کانفرنس نے پارٹی کے سینئر لیڈر چودھری محمد رمضان اور علی محمد ڈار کو کشمیر اور شیخ مصطفی کمال اور انیل دھر کو جموں کے لئے کوالیکشن آفیسر نامزد کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں