این آئی اے کے شوپیان، پلوامہ اور بڈگام میں چھاپے

سرینگر: قومی تحقیقاتی ایجنسی نے منگل کی صبح شوپیان، پلوامہ اور بڈگام کے متعدد مقامات پر چھاپہ مارکاروائی کی ہے۔ یہ کاروائی این آئی اے نے پولیس اور سی آر پی ایف اہلکاروں کے ہمراہ انجام دی ہے۔ پلوامہ کے گلبْگ علاقے میں این آئی اے نے اویس احمد ڈار کے گھر پر چھاپہ مارا۔

اس دوران ان کے گھر سے تین موبائیل فون ضبط کئے گئے ہیں۔ اویس احمد ڈار پچھلے تین دنوں سے پولیس حراست میں ہیں اور آج ان کے گھر پر چھاپہ مارا گیا۔ذرائع کے مطابق یہ کاروائی جنگجو ؤں کی معاونت و مددگاروں کے نیٹ ورک کو پکڑنے کے لیے کی گئی ہے۔

اسی کے علاوہ ضلع بڈگام میں بھی این آئی اے نے کارروائی کی اور اومپورہ میں حفیظ اللہ مغلو کے گھر پر چھاپہ مارا۔ذرائع کے مطابق حفیظ اللہ کا تعلق ضلع کپواڑہ سے ہے جو اومپورہ میں کرائے کے مکان میں مقیم ہیں ذرائع سے یہ بھی معلوم ہوا کہ ان کی رہائش سے کچھ خاص نہیں ملا تا ہم معاملہ کی نسبت کیس درج کر کے مزید تحقیقات شروع کر دی گئی ہے۔

این آئی اے کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے منگل کو دہلی، این سی آر، اترپردیش اور جموں وکشمیر کے کئی مقامات پر چھاپہ ماری کی ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ ریزسٹنس فرنٹ سمیت مختلف عسکری تنظیموں کے اوور گراونڈ ورکرس سے جڑے نئے معاملے میں جموں وکشمیر کے16 ٹھکانوں پر چھاپہ ماری کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ مندرا پورٹ آرہے جہاز سے بھاری مقدار میں پکڑے گئے ڈرگس کے سلسلے میں دہلی این سی آر میں پانچ مقامات پر چھاپہ ماری کی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں