سرد ترین موسم اور کورونا ضوابط کے بیچ 12ویں جماعت کے سالانہ ریگولر امتحانات شروع

امتحانات میں شرکت کرنے والے طلاب کی تعداد74ہزار۔امتحا نانی مراکز کے باہر سیکورٹی کے سخت انتظامات

سر ینگر: سرد ترین موسم اور کرونا ضوابط کے بیچ منگل کو وادی میں 12ویں جماعت کے سالانہ ریگولر امتحانات شروع ہوئے۔ یہ امتحانات 9نومبر سے شروع ہوکر4دسمبر کو اختتام پذیر ہو ں گے۔ جس دوران امتحانی مراکز میں سرد موسم کے بیچ طلاب کی بھیڑ جمع ہوئی اور وہ امتحانی مراکز میں داخل ہونے میں سبقت لے جاتے ہوئے دیکھے گئے۔

بیشتر طالبات اپنے والدین کے ہمراہ امتحانی مراکز میں پہنچ گئیں۔امتحانی مراکز کے باہر سخت ترین سیکورٹی انتظامات عمل میں لائے گئے تھے،جبکہ مراکز کے اندر بھی کرونا وائرس سے بچنے سے متعلق معیاری عملیاتی طریقہ کار کو عملایا گیا تھا۔ مراکز میں ہاتھ دھونے کیلئے صابن اور سینی ٹائزروں کو دستیاب رکھا گیا تھا۔امتحانی مراکز کے ہالوں میں بھی امتحان کے دوران طلاب میں جسمانی دوری کے احتیاتی تدابیر کو عملایا گیا تھا۔

12ویں جماعت کے امتحانات میں 74ہزار طلاب نے رجسٹر یشن کرائی ہے،جن کیلئے739امتحانی مراکز کو قائم کیا گیا ہے۔حکام کا کہنا ہے کہ امتحان میں کم و بیش تمام طلاب حاضر رہیں اور انہوں نے کرونا ضوابط و معیاری عملیاتی طریقہ کار کو عملایا۔ امتحانکے دوران نگران عملے نے طلاب کو امتحان میں دی گئی اس رعایت کہ انہیں سونمبرات میں سے صرف 70نمبرات کے سوالات ہی حل کرنے ہیں،کے بارے میں بھی معلومات فراہم کیں۔

تین گھنٹے کے سوا لنامے کے بجائے صرف ڈھائی گھنٹے کا وقت دیا گیا۔اس دوران جموں کشمیر بورڑ آف اسکول ایجوکیشن کے افسران نے کئی امتحانی مراکز کا دورہ کیا۔بورڈ حکام نے مراکز کا معائنہ کرنے کے دوران امتحانات کے نگرانی عملے اور اسکول منتظمین پر زور دیا کہ وہ امتحانات میں شرکت کرنے والے طلاب کو کرونا وائرس جیسے وباء کو مد نظر رکھتے ہوئے ہر ممکن سہولیت فراہم کریں۔

اسکولوں کے سربراہاں کو ہدایت دی گئی تھی کہ وہ امتحانی ہالوں کو گرم اور روشن رکھنے کے انتظامات کو یقینی بنائے۔ بورڈ حکام نے برن ہال اسکول سری نگر میں خصوصی طور پر معذور طلباء کے لیے ایک امتحانی مرکز بھی قائم کیا ہے۔ محکمہ صحت کی ایک ٹیم طلباء کے لیے وہاں موجود ہوگی اس کے علاوہ امتحان کے دنوں میں والدین کے لیے ویٹنگ ہال کی سہولت بھی اسکول میں دستیاب تھے۔ ادھرجوائنٹ سکریٹری امتحان نے کہا کہ اداروں کے سربراہان سے کہا گیا ہے کہ وہ امتحانی ہالوں میں ہیٹنگ اور روشنی کے مناسب انتظامات کو یقینی بنائیں۔

انہوں نے کہا کہ جن اسکولوں میں امتحانی مراکز قائم کیے گئے ہیں ان کے سربراہان سے کہا گیا ہے کہ وہ امتحانات کے انعقاد کے لیے حکومت کی طرف سے جاری کردہ تمام کویڈرہنما خطوط پر عمل پیرا ہوں۔ڈیزاسٹر مینجمنٹ جموں و کشمیر کے محکمہ کی ریاستی ایگزیکٹو کمیٹی نے پہلے ہی حکم دیا ہے کہ دسویں اور بارویں جماعت کے سالانہ امتحان میں شرکت کرنے والے طلباء کو اپنے امتحانات کے ہر دن والدین کی رضامندی ساتھ لے کر جانا چاہئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں