اے سی بی نے کلرک کو رنگے ہاتھوں دھر دبوچا

سری نگر، اینٹی کرپشن بیورو نے تحصیل آفس بونیار میں تعینات کلرک کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں دھر دبوچ کرسلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا۔

اے سی بی کے ایک ترجمان نے بتایا کہ اینٹی کرپریشن بیورو میں ایک شخص نے تحریری طورپر شکایت درج کی کہ وہ تحصیل آفس بونیار میں لمبردار تقرری آرڈر حاصل کرنے کی غرض سے پہنچا اور وہاں موجود تحصیلدار نے اسے کلرک معرفت الحق کے پاس جانے کو کہا ۔

شکایت کنندہ نے جب کلرک سے تقرری آرڈر کے حصول کی خاطر رابط قائم کیا تو اس نے دو ہزار روپیہ کی رشوت کا تقاضہ کیا ۔

سائل نے کلرک کو دو ہزار روپیہ کی رشوت بھی دی لیکن کلرک نے مزید 20ہزار روپیہ مانگے ۔

اے سی بی کے مطابق سائل نے اینٹی کرپشن بیورو میں کلرک کے خلاف شکایت درج کی جس کے بعد اس ضمن میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کی گئی۔

موصوف ترجمان نے بتایا کہ اے سی بی نے جال بچھایا جس دوران کلرک کو سائل سے دس ہزار روپیہ کی رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں دھر دبوچا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ آزاد گواہوں کی موجودگی میں کلرک سے رشوت کی رقم برآمد کرکے ضبط کی گئی ۔

انہوں نے مزید بتایا کہ کلرک کی جامہ تلاشی کے دوران مزید 64ہزار پانچ سو روپیہ کی رقم برآمد ہوئی۔

اے سی بی کے مطابق رشوت خور کلر ک کے چند لورا، ٹنگمرگ اور ہمدانیہ کالونی بمنہ سری نگر میں رہائشی مکانوں کی تلاشی لی گئی ۔

اس سلسلے میں مزید تحقیقات جاری ہے۔

یو این آئی، ارشید بٹ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں