جی ٹونٹی کے بعد جموں وکشمیر کے سیاحتی سیکٹر میں بڑی تبدیلی آئی:سکریٹری محکمہ سیاحت

سری نگر، محکمہ سیاحت کے سکریٹری ڈاکٹر سید عابد رشید شاہ کا کہنا ہے کہ جی ٹونٹی ٹورزم اجلاس کے انعقاد کے بعد جموں و کشمیر کے سیاحتی شعبے میں بڑی تبدیلی رونما ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت 75 نئے سیاحتی مقامات کو فروغ دے رہی ہے جہاں تمام تر ضروری انفراسٹرکچر کو دستیاب رکھا جائے گا۔

موصوف سکریٹری نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کو یہاں نامہ نگاروں کے سوالوں کے جواب دینے کے دوران کیا۔انہوں نے کہا: ‘جی ٹونٹی اجلاس کے بعد جموں و کشمیر کے سیاحتی شعبے میں بڑی تبدیلی آئی اور اب لوگ قومی سطح اور بین الاقوامی سطح کے ایونٹس میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہیں اور کہہ رہے ہیں یہ ایونٹس جموں و کشمیر میں ہی ہونے چاہئے’۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت 75 نئے سیاحتی مقامات کو فروغ دے رہی ہے جہاں تمام تر ضروری انفراسٹرکچر کو دستیاب رکھا جائے گا۔

ڈاکٹر عابد رشید نے کہا کہ جس طرح موبائل نیٹ ورک کو یقینی بنانے کے لئے دودھ پتھری میں ٹاور قائم کیا گیا ہے اور اسی طرح یوسمرگ اور دیگر مقامات جہاں ضرورت ہے، میں بھی ایسا کام انجام دیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ حکومت جموں و کشمیر کے ابھرتے ہوئے فنکاروں کو پیلٹ فارم فراہم کرنے کے لئے ہر ممکن اقدام کرے گی۔ان کا کہنا تھا کہ کشمیر کی تاریخ پرانی ہے اور سری نگر ملک کا دوسرا قدیم ترین شہر ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہماری 4 ہزار سالہ تاریخ ہے اور آرٹ کا یہاں ایک بڑا رول رہا ہے۔

یو این آئی ایم افضل

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں