کسی کو ای رکشہ سروس میں رکاوٹ پیدا کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی:آر ٹی او کشمیر

سری نگر، ریجنل ٹرانسپورٹ افسر کشمیر سید شہنواز بخاری کا کہنا ہے کہ وادی کشمیر میں دوسرے آپریٹرز کو ای رکشہ خدمات میں رخنہ ڈالنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ ای رکشہ سروس کے لئے لوگوں کی ڈیمانڈ بڑھ رہی ہے جہاں بھی ضرورت ہوگی اس سروس کو وہاں دستیاب رکھا جائے گا۔

موصوف آر ٹی او نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کو یہاں نامہ نگاروں کے ساتھ بات کرنے کے دوران کیا۔

انہوں نے کہا: ‘میری نوٹس میں لایا گیا کہ کچھ سومویونیوں کے ٹھیکہ دار ہیں یا کسی ایک علاقے میں کوئی بندہ کھڑا ہوا ہے جس نے اس علاقے میں قبضہ کرنے کی کوشش کی ہے ایسا نہیں ہونے دیا جائے گا’۔

ان کا کہنا تھا کہ جہاں بھی ای رکشہ سروس کی ضرورت ہے وہاں اس سروس کو دستیاب رکھا جائے گا کیونکہ عوام کی طرف سے اس سروس کی ڈیمانڈ بڑھ رہی ہے۔

مسٹر بخاری نے کہا کہ ای رکشہ سروس کو صرف دو ہی روٹس پر چلنے کی اجازت نہیں ہے۔

انہوں نے کہا: ‘ای رکشہ سروس کے لئے صرف دو ہی روٹس ایک قومی شاہراہ اور دوسرا ائیر پورٹ روڈ پر چلنے کی اجازت نہیں ہے کیونکہ ان دونوں روٹس پر گاڑیوں کا زیادہ رش بھی ہوتا ہے گاڑیاں زیادہ تیز بھی چلتی ہیں’۔

ان کا کہنا تھا کہ اس کے علاوہ ای رکشوں کے لئے لگ بھگ 80 روٹس کی وضاحت کی گئی ہے۔

موصوف افسر نے کہا کہ ٹرانسپورٹ کے اس ذریعے کی لوگوں کو ضرورت ہے اور ان سے کسی کے روز گار پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔

انہوں نے کہا کہ اس سروس سے لوگ راحت کی سانس لے رہے ہیں اور ان رکشوں کو کسی نہ کسی روڈ پر چلنا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس سروس میں رخنہ ڈالنے کی کوشش کرنے والوں کے خلاف تحت قانون کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

یو این آئی ایم افضل

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں