یونان میں ’ڈینیل‘ طوفان سے تین افراد کی موت

ایتھنز، یونان میں طوفان ’ڈینیل‘ سے تین لوگوں کی موت اور تین دیگر لاپتہ ہو گئے۔ ملک کی قومی خبر رساں ایجنسی اے ایم این اےنے بدھ کو یہ اطلاع دی۔

خبر رساں ایجنسی کی خبر کے مطابق، ماہرین موسمیات کے ذریعہ ’ڈینیل‘ نام دیئے گئےاس طوفان کے سبب پیر سے ملک کے مغربی حصوں میں شدید بارش ہورہی ہے۔

اس کی وجہ سے منگل اور بدھ کو وسطی یونان میں بڑے پیمانے پر سیلاب آیا، جس سے لوگ بستیوں کو خالی کرنے پر مجبور ہوئے۔

انھوں نے کہا کہ بدھ کے روز فائر فائٹرز کو وسطی یونان میں بالترتیب وولوس اور لاریسا کے قصبوں کے قریب سے ایک 87 سالہ خاتون اور ایک 82 سالہ شخص کی لاشیں ملی ہیں۔ منگل کو وولوس کے قریب ایک چرواہے کی بھی موت ہوگئی۔

اے ایم این اےکے مطابق، اسی علاقے میں منگل اور بدھ کو تین افراد کے لاپتہ ہونے کی اطلاع ہے۔

انہوں نے کہا کہ طوفان سے سینکڑوں گھر اور کاروبار متاثر ہوئے ہیں۔ کسانوں اور مویشی پروروں نے نقصان کی اطلاع دی، جبکہ ایتھنز کو شمال میں بندرگاہی شہر تھیسالونیکی سے ملانے والی قومی شاہراہ کے کچھ حصوں پر ٹریفک میں خلل پڑا۔

تازہ ترین اپ ڈیٹس کے مطابق، پچھلے 48 گھنٹوں کے دوران فائر ڈپارٹمنٹ کو 2,421 ٹیلی فون کالز موصول ہوئی ہیں جن میں بنیادی طور پر تھیسالی علاقے میں لوگوں کو نکالنے، پانی کی نکاسی اور گرے ہوئے درختوں کو صاف کرنے میں مدد کی درخواست کی گئی ہے۔

بدھ کو دارالحکومت ایتھنز میں بھی شدید بارش ہوئی، جس سے اہم راستے اور سڑکیں کچھ وقت کے لئے ندیوں میں تبدیل ہوگئے۔

افسران نے شہریوں کو غیر ضروری نقل و حرکت سے بچنے اور بیدار رہنے کے لیے متعدد الرٹ جاری کیے ہیں۔ جمعرات کی شام تک خراب موسمی حالات میں بہتری کی توقع ہے۔

یو این آئی۔ این یو۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں