نائیجیریا میں کشتی الٹنے سے 17 افراد ہلاک

ابوجا، نائیجیریا کی مشرقی ریاست ترابہ میں ہفتہ کو ایک مسافر کشتی الٹنے سے کم از کم 17 افراد کی موت ہو گئی۔ مقامی حکام نے یہ اطلاع دی۔

ترابہ میں نیشنل ایمرجنسی مینجمنٹ ایجنسی کے آپریشنز کے سربراہ بشیر گرگ نے بتایا کہ اب تک اس واقعے میں 17 افراد کی لاشیں نکالی جا چکی ہیں جب کہ 12 افراد کو بچا لیا گیا ہے۔

مسٹر گرگ نے صحافیوں کو بتایا کہ ایک مقامی بازار سے خواتین اور بچوں سمیت کم از کم 104 مسافروں کو لے جانے والی کشتی ترابہ کے مقامی سرکاری علاقے کریم لامیڈو کی طرف جاتے ہوئے ڈوب گئی۔

اہلکار نے واقعے کے لیے کشتی کی اوور لوڈنگ کو ذمہ دار ٹھہرایا اور کہا کہ مزید تحقیقات جاری ہیں۔ ترابہ ریاست کے گورنر اگبو کیفاس نے ایک بیان میں اس واقعے کو انتہائی افسوسناک قرار دیا اور مقامی امدادی کارکنوں پر زور دیا کہ وہ تلاش اور بچاؤ کی کارروائیوں کو تیز کریں۔

مغربی افریقی ملک میں کشتیوں کے حادثات اکثر اوور لوڈنگ، خراب موسم اور ناقص آپریشن کی وجہ سے ہوتے ہیں۔ گزشتہ ماہ، نائیجیریا کے صدر بولا تینوبو نے ملک بھر میں بار بار ہونے والے مہلک کشتیوں کے حادثات کی مکمل اور جامع تحقیقات کا حکم دیا تھا۔

یواین آئی۔الف الف

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں