گزشتہ چار دنوں میں 48 اسرائیلی فوجی مارے گئے، حماس کا دعویٰ

غزہ، حماس نے دعویٰ کیا ہے کہ گزشتہ چار دنوں میں مہم کے لڑاکوں کے ہاتھوں 48 اسرائیلی فوجی ہلاک اور 35 فوجی ساز و سامان کو نقصان پہنچا ہے۔

حماس کے عسکری ونگ القسم بریگیڈز کے ترجمان ابو عبیدہ نے ٹیلی گرام پر کہا کہ ’’گزشتہ چار دنوں کے دوران القسم کے لڑاکے 35 اسرائیلی فوجی گاڑیوں کو مکمل یا جزوی طور پر تباہ کرنے اور 48 اسرائیلی فوجیوں اور متعدد دیگر کو ہلاک کرنے میں کامیاب ہو ئے اور کئی زخمی ہو ئے ہیں۔

واضح رہے کہ 7 اکتوبر کو حماس نے غزہ پٹی سے اسرائیل کے خلاف زبردست راکٹ حملہ کیا، سرحد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اسرائیلی فورسز اور شہریوں پر فائرنگ کی۔ اس کے نتیجے میں 1,200 سے زیادہ اسرائیلی مارے گئے اور تقریباً 240 کو اغوا کر لیا گیا۔ اسرائیل نے جوابی حملہ کیا اور غزہ کی مکمل ناکہ بندی کا حکم دیا۔ اسرائیل نے حماس کے جنگجوؤں کو ختم کرنے اور یرغمالیوں کو بچانے کے بیان کردہ ہدف کے ساتھ غزہ میں زمینی دراندازی شروع کی۔ مقامی حکام کے مطابق اسرائیلی حملوں میں غزہ میں اب تک 20,400 سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

24 نومبر کو قطر نے اسرائیل اور حماس کے درمیان عارضی جنگ بندی کے آغاز، کچھ قیدیوں اور یرغمالیوں کے تبادلے اور غزہ کو انسانی امداد کی ترسیل کے معاہدے کی ثالثی کی۔ اس جنگ بندی کو کئی بار بڑھایا گیا اور یہ یکم دسمبر کو ختم ہوئی۔

یو این آئی۔ این یو۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں