اسرائیلی حملوں میں 24 گھنٹوں میں 241 فلسطینی جاں بحق،382 زخمی

یروشلم، غزہ کی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اسرائیل کی جانب سے علاقے کے کئی حصوں پر گولہ باری کے نتیجے میں 241 فلسطینی جاں بحق ہوگئے ہیں۔

حماس کے زیر انتظام غزہ کی وزارت صحت نے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 241 فلسطینیوں کے جاں بحق اور 382 کے زخمی ہونے کی اطلاع دی ہے۔

اسرائیلی فوج کے چیف آف اسٹاف ہرزی حلوی کا کہنا ہے کہ غزہ پر جنگ ’کئی مہینوں‘ تک جاری رہے گی۔

رپورٹس کے مطابق غزہ شہر تلکرم کے مشرق میں واقع نور شمس پناہ گزین کیمپ میں بھی اسرائیلی ڈرون حملے میں کم از کم 6 افراد مارے جاچکے ہیں۔

فلسطینی ہلال احمر سوسائٹی کا کہنا ہے کہ نور شمس میں خوفناک ڈرون حملے میں زخمی ہونے والے افراد کے علاج کے لیے ایمبولینسوں اور طبی عملے کو اسرائیلی فورسز نے روک دیا ہے۔ہلال احمر کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہےکہ اسرائیلی فوج نے خان یونس میں واقع ہیڈکوارٹر کی بالائی منزلوں کو نشانہ بنایا

اقوام متحدہ کے سربراہ انتونیو گوٹیرس نے سگریڈ کاگ کو غزہ کا امدادی رابطہ کار مقرر کیا ہے، لیکن غزہ میں مسلسل جاری جنگ کی وجہ سے انسانی امداد پہنچانا مشکل ہوگیا ہے۔

دوسری جانب اسرائیلی وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو نے کہا ہے کہ اسرائیلی افواج غزہ میں جنگ کی شدت کو کم نہیں کرے گی اور ’جنوبی غزہ میں آپریشن کو مزید تیز کیا کردیا جائے گا‘۔

غزہ پر اسرائیلی حملوں میں ہلاک شدگان کی تعداد 241 کے اضافے سے 20915 ہو گئی ہےجبکہ 54918 افراد زخمی ہیں۔

یواین آئی۔ م س

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں